تازہ ترین
Home / ورلڈ / بھارت میں خواتین دیوتا کوخوش کرنے کےلئے کیا کیا پیش کرتی ہیں؟ تہلکہ خیز انکشافات

بھارت میں خواتین دیوتا کوخوش کرنے کےلئے کیا کیا پیش کرتی ہیں؟ تہلکہ خیز انکشافات

poor women of india

نئی دہلی : (گیٹ نیوز ) بھارت میں سب سے زیادہ ہندو مذہب سے تعلق رکھنے والے افراد رہتے ہیںاور اسی طرح بھارت کے مختلف علاقے کے رسم و رواج بھی مختلف ہیں۔بھارت کا ایک ایسا علاقہ بھی ہے جہاں خواتین دیوتا کو خوش کرنے کےلئے اپنے بالوں کا نذرانہ پیش کرتی ہیں، ہر سال لاکھوں کی تعداد میں لوگ جنوبی انڈیا کے دو مندروں کی جانب اس امید پر سفر کرتے ہیں کہ ان کی دعاو¿ں کو شرف قبولیت مل جائے گا۔ لیکن ہر معجزہ ایک قربانی کا طالب ہوتا ہے اور یاتری اپنے بالوں کی قربانی دیتے ہیں۔‘ یہ ہلکی سی تراش خراش نہیں ہوگی بلکہ پورے سر کے بال مونڈے جاتے ہیں۔ اپنی کوئی بہت خوبصورت چیز خدا کے لیے قربان کر کے، اپنی انا ختم کر کے اور لمبی لہراتی زلفوں کی قربانی دے کر یاتری یہ امید رکھتے ہیں کہ دیوتا جواب میں انھیں اچھی قسمت سے نواز دیں گے۔ واضح رہے کہ ہالی وڈ سے لے کر برطانیہ اور برطانیہ سے لے کر جنوبی افریقہ تک، بہت بڑے پیمانے پر استعمال ہونے والے انسانی بال بھارتیوں کے ہوتے ہیں کیوں کہ ان کی ساخت کاکیشیئن نسل سے تعلق رکھتی جنھیں بال بنانے والی صنعت میں بہت پسند کیا جاتا ہے۔ بھارت کے لیے یہ صنعت ڈھائی کروڑ ڈالر سالانہ کی آمدن پر مشتمل ہے۔ ایک کلوگرام بالوں کے 130 ڈالر ملتے ہیں اور زیادہ لمبے بال جیسے کہ اما کے بال 160 گرام ہیں، تو ان کی کل قیمت 20 ڈالر کے قریب ہے۔ بال منڈوانے کی رسم یا جب مذہبی مقاصد کے لیے کی جائے تو اسے مونڈن کہا جاتا ہے۔ یہ ایک قدیم ہندو داستان کے ساتھ منسوب ہے۔ اس داستان کی کئی روپ موجود ہیں لیکن ان تمام کا مرکز بھگوان وشنو ہیں جنھوں نے اپنے سر پر کلہاڑی سے وار کیا جس سے وہ اپنے بالوں کے ایک حصے سے محروم ہو گئے۔ پھر نیلا دیوی نے متبادل کے طور پر اپنے بالوں کا ایک حصہ انھیں پیش کیا۔ وشنو بہت شکرگزار تھے کہ کسی کی جانب سے انھیں اپنے بال قربانی کے طور پر پیش کرنے کے بعد ان کی خواہش منظور کر لی گئی۔ تروپتی مندر وہ جگہ ہے جہاں دنیا میں سب سے زیادہ بال اکٹھے کیے جاتے ہیں۔ یہ دنیا میں سب سے زیادہ زیارت کیے جانے والے مذہبی مقامات میں سے ایک بھی ہے جس میں ہر روز تقریباً ایک لاکھ یاتری آتے ہیں۔ جبکہ سالانہ اس سے 30 لاکھ ڈالر کمائے جاتے ہیں۔ حجاموں کو بھی اس کام کے لیے ہر ایک بار بال منڈنے کے 15 روپے دیے جاتے ہیں۔

 

سابقہ پوسٹ
اگلی پوسٹ

Check Also

Italy tourism destinations

عوام خوشی سے جھوم اٹھے،18سال کا ہوتے ہی مالا مال ہو جائیں گے

نیو یارک۔(گیٹ نیوز) ترقی یافتہ اور ترقی پذی ممالک میں بڑا فر ق وہاں کی …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.